زندہ رہنے کے لیے کب تک اداکاری کریں

شاعر : تاجدار دہلوی 
سچ کہیں کس شخص سے،کس سے ریاکاری کریں
زندہ    رہنے کے لیے کب تک    اداکاری کریں
جن    سے    ملنا بھی    ہے     توہینِ مذاقِ زندگی
ہائے مجبوری کہ ہم اُن کی بھی دل داری کریں 

You might also like

Leave A Reply

Leave Your Comments for this Post