غزل : علیم حیدر


علیم حیدر
فرازِ شاخ سے ٹوٹا، ہوا ہے ہاراہوا
میں ایک برگ تھابادِخزاں کاماراہوا

You might also like

Leave A Reply

Leave Your Comments for this Post