Al-Quran (القرآن)

بشکریہ جناب صداقت بلوچ
بِسۡمِ اللّٰهِ الرَّحۡمٰنِ الرَّحِیۡمِ
سورة التوبة، آیت 101
وَ مِمَّنۡ حَوۡلَکُمۡ مِّنَ الۡاَعۡرَابِ مُنٰفِقُوۡنَ ؕ ۛ وَ مِنۡ اَہۡلِ الۡمَدِیۡنَۃِ ۟ ۛ ؔ مَرَدُوۡا عَلَی النِّفَاقِ ۟ لَا تَعۡلَمُہُمۡ ؕ نَحۡنُ نَعۡلَمُہُمۡ ؕ سَنُعَذِّبُہُمۡ مَّرَّتَیۡنِ ثُمَّ یُرَدُّوۡنَ اِلٰی عَذَابٍ عَظِیۡمٍ ﴿۱۰۱﴾ۚ
اور تمہارے ارد گرد جو دیہاتی ہیں ، ان میں بھی منافق لوگ موجود ہیں ، اور مدینہ کے باشندوں میں بھی ۔ ( ٧٦ ) یہ لوگ منافقت میں ( اتنے ) ماہر ہوگئے ہیں ( کہ ) تم انہیں نہیں جانتے ، انہیں ہم جانتے ہیں ۔ ان کو ہم دو مرتبہ سزا دیں گے ۔ ( ٧٧ ) پھر ان کو ایک زبردست عذاب کی طرف دھکیل دیا جائے گا ۔
Sunnan e Ibn e Maja Hadees # 284
حَدَّثَنَا مُحَمَّدُ بْنُ يَحْيَى النَّيْسَابُورِيُّ، ‏‏‏‏‏‏حَدَّثَنَا أَبُو الْوَلِيدِ هِشَامُ بْنُ عَبْدِ الْمَلِكِ، ‏‏‏‏‏‏حَدَّثَنَا حَمَّادٌ، ‏‏‏‏‏‏عَنْ عَاصِمٍ، ‏‏‏‏‏‏عَنْ زِرِّ بْنِ حُبَيْشٍ، ‏‏‏‏‏‏أَنَّ عَبْدَ اللَّهِ بْنَ مَسْعُودٍ، ‏‏‏‏‏‏قَالَ:‏‏‏‏ قِيلَ يَا رَسُولَ اللَّهِ كَيْفَ تَعْرِفُ مَنْ لَمْ تَرَ مِنْ أُمَّتِكَ؟ قَالَ:‏‏‏‏ غُرٌّ مُحَجَّلُونَ بُلْقٌ مِنْ آثَارِ الطُّهُورِ .
عرض کیا گیا: اللہ کے رسول! آپ اپنی امت کے ان لوگوں کو قیامت کے دن کیسے پہچانیں گے جن کو آپ نے دیکھا نہیں ہے؟ آپ صلی اللہ علیہ وسلم نے فرمایا: وضو کے اثر کی وجہ سے ان کی پیشانی، ہاتھ اور پاؤں سفید اور روشن ہوں گے ۱؎۔
Sahih Hadees
السلام علیکم
اللّہ کریم ہمیں اپنی رحمتیں اور برکتیں نصیب فرما۔ ہماری خطائیں بخش دے, توبه قبول فرما, رزق‎ ‎حلال‎, مقام عبدیت, عشق مصطفے عطا فرما. ھم پر رحم فرما. یا رحیم! ھمیں شرک و بدعت اور ریاکاری سے بچا۔ شیطان اور حاسدوں کے شر سے اپنی پناه میں رکھ اور ھمیں اپنے ماں باپ کے لیے صدقہ جاریہ بنا دے. صحت کاملہ عطا فرما۔
آمین‎

You might also like

Leave A Reply

Leave Your Comments for this Post