شاعری

نعت ۔۔۔ شاعر: افتخارعارف


افتخار عارف 
بلالؓ  و  بوذرؓ و سلمانؓ   کے  آقاؐ  ادھر  بھی
بدل جاتی ہے جس سے دل کی دنیا وہ نظر بھی
میں بسم اللہ لکھ کے جب بھی لکھتا ہوں محمدؐ
قلم قرطاس پر آتے ہی جھک جاتا ہے سر بھی
حرم سے مسجد الاقصیٰ ، اُدھر سدرہ سے آگے
مسافر بھی عجب تھا اور عجب تھی رہگزر بھی
محمدؐ کے خدا جب بھی کبھی مشکل کا وقت آئے
دعا  کو  ہاتھ  اُٹھیں  اور دعا  میں  ہو  اثر بھی
بحقِ       کفش    بردارانِ  دربارِ    رسالتؐ
ثنا خوانوں میں شامل ہو گیا اک بے ہنر بھی
میں پہلے بھی مشرف ہو چکا ہوں حاضری سے
خدا  چاہے  تو  یہ  نعمت  ملے  بارِ دگر   بھی

km

About Author

2 Comments

  1. TigoBigem

    ستمبر 20, 2019

    propecia prescription Therefore, tolvaptan may be a suitable drug for combination treatments with diuretics in CKD patients with refractory chronic heart failure CHF

  2. TigoBigem

    ستمبر 20, 2019

    The raw intensity values of the measured genes were normalized using MAS 5 clomiphene citrate 50 mg for male

Leave a comment

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے

You may also like

پنجابی صفحہ شاعری

غزل

  • اگست 25, 2019
شاعر:  شہزاد تابش اکھر باہجوں پیار فسانے رہ گئے نیںٹٹے تیر تے کئی نشانے رہ گئے نیں گزرے وقت نوں
شاعری

نعت

  • اگست 27, 2019
شاعر: احمد ندیم قاسمی میں! کہ بے وُقعت و بے مایہ ہوں تیری محفل میں چلا آیا ہوں آج ہوں