ورلڈ و میٹر : سلمیٰ جیلانی

روزانہ میں اس تازہ چارٹ کو دیکھتی ہوں
فری ہینڈ پانے والے
اس وائرس سے مزید کتنوں نے
چوٹ کھائی
کتنوں کو شہ مات ہوئی
اور کتنے واپس
صحت کو پا سکے
ایسا لگتا ہے
یہ کوئی اولمپک کھیلوں کے مقابلے ھیں
ایک سو اٹھانوے ملکوں کے درمیان
خوفناک اور وحشتناک موت کی
دوڑ لگی ہے
کل تک چین جو پہلے نمبر پر تھا
آج امریکہ نے اسے مات دے دی ہے
فنا کو دوام ہے
کئی بار کی طرح
زندگی کی گلیوں میں
موت کا رقص پھر اپنے پورے عروج پر ہے
زندگی ہار رہی ہے
نئی ویکسین کے آنے تک
مسیحا کی پکار پر لبیک کہنے والے
موت کے اس اولمپکس میں
فاصلے اور خود ساختہ تنہائی
کو ہتھیار بنا رہے ہیں
ان کے تیور بتا رہے ہیں
ہمت نہیں ہاریں گے
آخری سانس تک
امید کا بریدہ پرچم
سربلند رکھیں گے

You might also like

Leave A Reply

Leave Your Comments for this Post